n2

وزیراعظم اورجج سمیت تمام وفاقی اورصوبائی اداروں کوجعلی وفاقی وزیربن کرفراڈ کرنے والے سلامت علی چوہان کوگرفتارکرلیا ہے، سلامت علی چوہان فنانشل کمرشل اینڈ کنزیومر افیئر کا وفاقی وزیربن کرلوگوں کو قرضہ دلانے کی آڑمیں لوٹ رہا تھا، جس کے لیے سلامت علی چوہان نے وزیر اعظم، وزارت خزانہ سمیت دیگروفاقی اداروں کو خط بھی لکھے کہ ان کے ساتھ تعاون کیا جائے، جعلی وزیر گزشتہ 6 برس سے یہ کام کررہا تھا۔

ایف آئی کے مطابق جعلی وزیرنے پی ٹی سی ایل سے سرکاری نمبربھی حاصل کیا جب کہ جعلی وزیرنے چمبہ ہاوس لاہورمیں اپنا دفتربنانے اوراسٹاف کے لیے گاڑیاں اورسکیورٹی بھی مانگی تھی، جعلی وزیرنے ڈی سی او سے اپنی سکیورٹی کے لیے خط بھی لکھا جس پرڈی سی اونے ڈی ائی جی پولیس کو بھی سکیورٹی دینے کاحکم دے دیا، حیران کن بات یہ ہے کہ وزیر اعظم سے لے کرتمام صوبائی حکومتوں کو بھی جعلی وزیر نے خطوط لکھے لیکن کسی بھی نے بھی ان خطوط کی چھان بین نہیں کی اورجعلی وزیرکے خطوط پرتمام ادارے احکامات بھی دیتے بھی رہے۔

دوسری جانب جعلی وزیرنے وزیراعظم کو خط بھی لکھا کہ آپ بے روزگاری ختم کرنے میں ناکام ہوگئے ہیں اورمیں نے اس کا حل تلاش کرلیا ہے جب کہ سلامت علی چوہان نے وزیراعظم سے ملاقات کے لیے وقت بھی مانگ رکھا تھا۔

Advertisements